آیئے تعمیرِ نوع کریں ایک برتر پاکستان کے لیے

تعلیم اصلاحات

Click for English Translation
تحریرو تحقیق زاہد اکرام

Education Reforms

FB.com/Zahid.Ikram.Official

تعلیم اصلاحات

انسانی جدوجہد کو ہے یہی اولین مقصود
کہ فطرت کی قوتوں کو کرنا ہے اسے مسخر
پھر اقدارِ خداوندی کے مطابق ہوگی نشوونما
جو نوعِ انساں کی منفعت کیلئے صر ف ہو اگر

Zahid Ikram

کوالٹی تعلیم ایڈوانس اور سول سوسائٹی کے لئے بنیادی حیثیت رکھتی ہے.
ہمارے مذہب اسلام نے مردوں اور عورتوں کے لئے علم حاصل کرنے پر زور دیا ہے.
میں مندرجہ ذیل تعلیمی اصلاحات پیش کرنا چاہتا ہوں

تمام تعلیمی نظام کے کورس اور سلیبس اور فیس میں ایک میعار لائیں
بچے اور بچیوں کے ساتھ بھی برابری ہو
ہمیں زیادہ لڑکییوں کے تعلیمی اداروں کو کھولنا ہوگا
اور لڑکیاں لی تعلیم پر زیادہ زور دینا ہے
اور لڑکیوں کے لئےزیادہ اسکالرشپ پیش کرتے ہیں.

وقت اور پیسے کے بہتر استعمال لے لیے تمام تعلیمی اداروں کو ڈبل شفٹ کھولا جائے ایک صبح کےوقت فل ٹائم اور دوسرا شام کو پارٹ ٹائمم، اگر بچیوں کے زیادہ سکول کھولنے کے فنڈز کا معملامہو تو ایک ہی تعلیمی ادارے لی بلڈنگ کو مختلف اوقات مین لڑکے اور لڑکیوں کے لیے استعمال کیا جانا چاہیے

مفت ٹرانسپورٹ، خوراک اور مشروبات، کتابیں اور نوٹ بکس اور ٹیبلٹس یا لیپ ٹاپ وغیرہ فراہم کیے جائیں
فرنیچر کو کلاس روم میں فراہم کریں، ورزش کے لئے گیجٹ کے ساتھ کھیلنے کے میدان، پھول پھلواری، صاف باتھ روم کی سہولیات اور طالب علموں کے لئے میٹرک سطح تک کچھ جیب خرچ بھی فیا جائے

ہمارے معاشرے میں مختلف طبقات کو ختم کرنے کے لئے اردو میڈیم، انگریزی میڈیم اور مدرسہ اسکولوں کے لئے کچھ اضافی مضامین کے علاوہ. سلیبس کو یکساں مقرر کیا جائے

 

غیر ملکی تعلیم کے لئے طالب علموں کو باہربھیجنے کی بجائے اپنے ملک میں جدید ٹیکنالوجی اور اپنی یونیورسٹیوں میں دنیا کے بہترین ٹیچرز درآمد کئے جائیں جس سے بہت سارا سرمایا باہر جانےسے روکا کا سکتا ہے اور
غیر ملکی طلباء پاکستان میں تعلیم کے لۓ آ سکتے ہیں اور ہمیں اپنے بجٹ کو منافع بخش بنا سکتے ہیں اور نئی یونیورسٹیاں مرتب کریں

گھریلو خدمات فراہم کرنے والے  موجودہ کاریگروں کے لئے پیشہ ورانہ مہارت کے زیادہ سے زیادہ تربیتی ادارے قائم کیے جائیں جن میں مثال کے طور پر الیکٹریشن، پلمبر، پینٹر، لکڑی کا کام، ہاؤس بلڈنگ (مستری)، ڈرائیونگ،ہیوی مشین آپریٹرز، فرج، اے سی کی مرمت، کار الیکٹریشن، آٹو میکینکس وغیرہ جیسے پروفیشنلز کاریگروں تیار کیے جائیں، انہیں کچھ بنیادی بول چال کی مہارت بھی سکھائیں یہ عمل لوکل ضروریات کو پورا کرنے کے ساتھ ساتھ بیرونی ملازمتوں کے لئے زیادہ پیشہ ورانہ اور پڑھے لکھے ورکرز مہیاکرے گا جس سےہمارا ملک غیر ملکی آمدن حاصل کرے گا اور اپنی برآمدات میںبھی اضافہ کرے گا

تمام اسکول / تعلیمی اداروں کو حکومتی نمائیدوں اور والدین کی کمیٹہی کی طرف سے منظم کیا جائے

نجی اسکول / تعلیمی اداروں میں داخلہ، ماہانہ ٹیوشن اور سالانہ فیس سرکاری اسکول / تعلیمی اداروں کی فیسوں سے ڈھیڑ گنا سے زیادہ نہیں چاہیے

ٹیکس دہندگان کے لئے امکی ٹیکس میں شراکت کے مطابق انکے بچوں کےتعلیمی فیسوں کو کم ہونا ضروری ہے

ہمارے قومی بجٹ میں سے 7-10٪ تعلیم پر خرچ کیے جائیں

ان پڑھ بالغوں کے لئے پارٹ ٹائم کلاسیں کا قیام اور ان کی بنیادی تعلیم مکمل طور پر حکومت کی طرف سے سپانسر ہو، یہ پاکستان میں خواندگی کی شرح کو بڑھانے میں مدد گار ہو گا

تعلیم ان تمام طالب علموں کے لئے مفت ہونا لازمی ہو جن کے والدین کی ماہانہ آمدن 30،000روپے تک ہو

اسلام بچوں کو سات سال تک کی عمر تک دین کے قوانین پر پابند نہیں کرتا،
کم از کم 6 سال کی عمر تک کے بچے کو اس کی ماں سے سیکھنے دیں اور اسے والدین سے لطف اندوز ہونے دیں
تاکہ بچہ کچھ بنیادی تعلیم اپنے والدین سے سیکھے اور 6 سالہ بچے کو اسکول میں داخلہ دیا جائے

تمام ٹیچر کلاسز کو پڑھانے سے پہلے ضروری منیادی کورس کہ تعلیم کیسے دی جائے مکمل کریں

تمام خواتین طلبا اور اسٹاف کے لئے حجاب پہننا لازمی کیا جائے

درس و تدریس کے طریقہ کار کو تبدیل کریں
ہم اکثر ہماری مادری زبان اردو / پنجابی میں سوچتے اور خواب دیکھتے ہیں لیکن ہم ایسی ثانوی زبانوں میں نہیں جو کہ ہم اسکولوں میں سیکھتے ہیں جیسے انگریزی / فرانسیسی وغیرہ
کسے ایک ماں جو غیر تعلیم یافتہ ہو کو اپنے چھوٹے ے بچے کو پڑھانا شروع کرتی جو کہ صفر آئی کیو لیول رکھتا ہو؟
وہ کسی بھی کتاب کو سکھانے کے لئے استعمال نہیں کرتی. وہ کسی بھی ہوم ورک کے لئے اپنے بچے نوٹ بک نہیں دیتی
نہ ہی وہ تدریس کے لئے کسی سفید / سیاہ بورڈ کا استعمال کرتی ہے اور نہ ہی کلاس روم میں استاد کی طرح کلاس لیتیہے لیکن وہ آپ کی زندگی کی بہترین استاد ٹھرتی ہے!
ماں کی طرح تدریس کے طریقوں کو سوچا اور اپنایا جائے

کردار کی تعمیر ہی ہماری تعلیم کا بنیادی مرکز ہونا چاہئے. ڈاکٹر، انجنیئر یا ایم بی اے ڈگری کسی استعمال کی نہیں اگر کوئی شخص انسانیت نہیں سیکھتا

عربی زبان، قرآن کریم کا درس و تدریس اور نماز کی ادا کرنا ئیگی تمام مسلم طلباء کے لئے لازم ہونا چاہیے

ہماری تعلیم میں اقبالیات (اسلام اور مسلم ریاست کے بارے میں علامہ اقبال کا قرآنی فلسفہ) شامل ہونا لازم ہو

 کمپیوٹر اور سمارٹ آلات کا استعمال اور مواصلاتی آلات کے اخلاقی استعمال کے بارے میں تدریس کو ابتدائی طور پر ہائی اسکول کے تمام طلبا کے لئے لازم ہو.

.
 




پاکستان کی ترقی کے لیے جدید اصلاحات کی فہرست

پاکستان کے لئے سمارٹ ٹیکنالوجی کا استعمال

الیکٹرانک نظامِ حکومت

گاڑیوں کا سستا ترین ٹریکنگ سسٹم

بجلی کی ترسیل میں نقصانات کے کنٹرول کی ٹیکنالوجی

الیکٹرانک روڈ ٹول ٹیکس کی ادائیگی کا نظام

الیکٹرانک ٹریفک کنٹرول سسٹم

دہشت گردی پر الیکٹرانک طائرانہ نظر

سب کیلئے ای موبائل فون کامرس

زندگی کے تمام شعبوں کے لئے صرف ایک شناخت

بحرِ بیکراں

Science in Quran

Let's Rebuild & Excel Pakistan

The Holy Quran Exhibition Park

Short Messages

بحرِ بیکراں

ZAHID IKRAM HOME INDEX

FB.com/Zahid.Ikram.Official

1998-2011 CCOL & ZAHID IKRAM